Headlines

‘غزہ پر حملے میں اپنے ہی لوگوں کو مارا، اب لاشیں بھی نہیں لے رہا اسرائیل’، حماس نے لگایا الزام

غزہ پر حملے میں اپنے ہی لوگوں کو مارا، اب لاشیں بھی نہیں لے رہا اسرائیل'، حماس نے لگایا الزام

‘غزہ پر حملے میں اپنے ہی لوگوں کو مارا، اب لاشیں بھی نہیں لے رہا اسرائیل’، حماس نے لگایا الزام

حماس نے الزام لگایا کہ اسرائیل نے تین قیدیوں کی لاشیں قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ حماس نے کہا کہ یہ تعداد اسی زمرے کے قیدیوں کی ہے جس پر اتفاق کیا گیا تھا۔ حماس نے کہا کہ ثالثوں نے اس کی تصدیق کی ہے۔

غزہ پر حملے میں اپنے ہی لوگوں کو مارا، اب لاشیں بھی نہیں لے رہا اسرائیل'، حماس نے لگایا الزام

غزہ: اسرائیل اور حماس کے درمیان عارضی جنگ بندی کے دوران اسرائیل نے حراست میں لیے گئے سات خواتین، بچوں اور غزہ پر بمباری کے نتیجے میں ہلاک ہونے والے تین قیدیوں کی لاشیں قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ گزشتہ چھ دنوں کی طرح آج یعنی جمعرات کو بھی عارضی جنگ بندی میں توسیع کے بعد قیدیوں اور یرغمالیوں کا تبادلہ ہونا تھا۔

لیکن حماس نے الزام لگایا کہ اسرائیل نے تین قیدیوں کی لاشیں قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ حماس نے کہا کہ یہ تعداد اسی زمرے کے قیدیوں کی ہے جس پر اتفاق کیا گیا تھا۔ حماس نے کہا کہ ثالثوں نے اس کی تصدیق کی ہے۔ حماس نے 7 اکتوبر کو جنوبی اسرائیل میں ایک حملے میں تقریباً 240 یرغمالیوں کو یرغمال بنایا، جس سے جنگ چھڑ گئی تھی۔

2 thoughts on “‘غزہ پر حملے میں اپنے ہی لوگوں کو مارا، اب لاشیں بھی نہیں لے رہا اسرائیل’، حماس نے لگایا الزام

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *