Headlines

ہیمنت سورین نے بلائی میٹنگ، کیا جھارکھنڈ کی پہلی خاتون وزیراعلی بنیں گی کلپنا سورین؟

ہیمنت سورین نے بلائی میٹنگ، کیا جھارکھنڈ کی پہلی خاتون وزیراعلی بنیں گی کلپنا سورین؟

ہیمنت سورین نے بلائی میٹنگ، کیا جھارکھنڈ کی پہلی خاتون وزیراعلی بنیں گی کلپنا سورین؟

دراصل جھارکھنڈ کے وزیر اعلیٰ ہیمنت سورین پر گرفتاری کی تلوار لٹکتے ہی ان کی اہلیہ کلپنا سورین کے وزیر اعلی بننے کی بحث ایک بار پھر تیز ہو گئی ہے۔ سیاسی ماہرین کے مطابق اگر ہیمنت سورین کو گرفتار کیا جاتا ہے تو ان کی جگہ ان کی اہلیہ کلپنا سورین وزیر اعلیٰ کی دعویدار ہو سکتی ہیں۔

رانچی : وزیراعلی ہیمنت سورین کے آج سامنے آنے کے ساتھ ہی جھارکھنڈ میں ایک بار پھر سیاسی ہلچل بڑھ گئی ہے۔ وزیر اعلی ہیمنت سورین نے منگل کو سب کے سامنے آتے ہی باپو واٹیکا میں اپنے ایم ایل ایز سے ملاقات کی اور پھر مہاتما گاندھی کو خراج عقیدت پیش کیا۔ اس کے بعد وزیراعلیٰ نے بیان دیا کہ میں تھا، ہوں اور رہوں گا۔ اس سے پہلے ہیمنت سورین نے ایم ایل ایز سے ملاقات کی۔ اس دوران ہیمنت سورین کے ساتھ ان کی اہلیہ بھی موجود تھیں۔

اس درمیان جھارکھنڈ میں ایک بار پھر ایک نام بحث میں آگیا ہے۔ دراصل جھارکھنڈ کے وزیر اعلیٰ ہیمنت سورین پر گرفتاری کی تلوار لٹکتے ہی ان کی اہلیہ کلپنا سورین کے وزیر اعلی بننے کی بحث ایک بار پھر تیز ہو گئی ہے۔ سیاسی ماہرین کے مطابق اگر ہیمنت سورین کو گرفتار کیا جاتا ہے تو ان کی جگہ ان کی اہلیہ کلپنا سورین وزیر اعلیٰ کی دعویدار ہو سکتی ہیں۔ تاہم فی الحال اس حوالے سے جے ایم ایم کی جانب سے کوئی سرکاری بیان سامنے نہیں آیا ہے۔ کلپنا سورین کو جھارکھنڈ کا نیا سی ایم بنانے کی بھی بات ہو رہی ہے۔ حالانکہ اس میں اب بھی بہت سی پیچیدگیاں ہیں۔

ادھر جھارکھنڈ کی سیاست میں ہلچل کے درمیان ایم ایل ایز کے رانچی سرکٹ ہاؤس پہنچنے کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق وزیراعلی ہیمنت سورین اپنے ایم ایل ایز کے ساتھ میٹنگ کریں گے اور مستقبل کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔ کانگریس ایم ایل اے عرفان انصاری نے بتایا کہ وزیراعلی ہیمنت سورین آج شام 7 بجے وزیراعلی کی رہائش گاہ پر قانون ساز پارٹی کی میٹنگ کریں گے۔ اس میٹنگ میں ہیمنت سورین ایم ایل ایز سے بات کریں گے اور مستقبل کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *