گجرات الیکشن میں یکساں سیول کوڈ کا شوشہ اگر ہندو ایک شادی کرتا ہے تو دوسروں کو بھی…………: وزیراعلیٰ آسام

RushdaInfotech November 24th 2022 urdu-news-paper
گجرات الیکشن میں یکساں سیول کوڈ کا شوشہ اگر ہندو ایک شادی کرتا ہے تو دوسروں کو بھی…………: وزیراعلیٰ آسام

گاندھی نگر: 23نومبر (ایجنسی) گجرات انتخابات میں اب صرف ایک ہفتہ باقی رہ گیا ہے۔ پہلے مرحلے کی ووٹنگ یکم دسمبر کو ہونے جا رہی ہے اور اس سے پہلے ہر پارٹی اپنی پوری طاقت انتخابی مہم میں جھونک رہی ہے۔ بی جے پی کی طرف سے بھی تجربہ کار لیڈروں کی پوری فوج کو میدان میں اتارا گیا ہے۔ گجرات انتخابات میں پارٹی امیدواروں کیلئے ووٹ مانگنے میں مصروف آسام کے وزیر اعلیٰ ہمانتا بسوا سرما نے یکساں سیول کوڈ کا شوشہ چھوڑا ہے۔گجرات میں ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے آسام کے وزیر اعلیٰ ہمانتا بسوا سرما نے کہا کہ اگر ایک ہندو ایک سے شادی کرتا ہے تو دوسرے مذاہب کے لوگوں کو بھی ایک ہی شادی کرنی پڑے گی۔ ملک میں یکساں سیول کوڈ کا نفاذ ہونا چاہیے۔ ایک شخص 2-3 شادیاں کرتا ہے، آخر آپ 2-3 شادیاں کیوں کریں گے؟ ملک میں جب ہندو ایک شادی کرتا ہے تو دوسرے مذاہب والوں کو بھی ایک ہی شادی کرنی چاہیے۔وزیر اعلیٰ سرما نے ریلی میں یکساں سیول کوڈ کا مسئلہ اٹھاتے ہوئے ملک میں یکساں سیول کوڈ نافذ کرنے کی ضرورت پر بات کی۔ خیال رہے کہ اتراکھنڈ کی طرح بی جے پی نے اپنے منشور میں ہماچل پردیش اور گجرات دونوں میں یکساں سیول کوڈ نافذ کرنے کی بات کی ہے۔ یہ اتراکھنڈ کے انتخابات میں بڑا مسئلہ بن گیا تھا۔ آسام کے وزیر اعلیٰ نے شردھا قتل کیس کے ملزم آفتاب کی بھی گجرات انتخابات میں انٹری کروادی۔ انہوں نے کہاکہ آفتاب نامی مسلمان لڑکے نے ایک ہندو لڑکی کے 35 ٹکڑے کر دیئے،اس نے لڑکی کو شادی کا جھانسہ دے کر یہ سب کیا۔
وہ دوسری لڑکیوں کو بھی ڈیٹ کرتا تھا۔انہوں نے کہا کہ ملک میں بہت سے آفتاب ہیں لہٰذا ’لو جہاد‘ کے خلاف قانون بنایا جائے۔
اس سے پہلے کچھ کے جلسے میں انہوں نے کہا تھاکہ ملک میں مضبوط لیڈر نہیں ہوگا تو ہر شہر میں ”آفتاب“پیدا ہوگا۔


Recent Post

Popular Links