ادھو ٹھاکرے کی پریشانیوں میں اضافہ 49ممبران اسمبلی شنڈے کے ساتھ،باغی ممبران کا دعویٰ

RushdaInfotech June 24th 2022 urdu-news-paper
ادھو ٹھاکرے کی پریشانیوں میں اضافہ 49ممبران اسمبلی شنڈے کے ساتھ،باغی ممبران کا دعویٰ

ممبئی:23جون(ایجنسی)مہاراشٹر کا سیاسی بحران اب ایک دلچسپ موڑ پر آگیا ہے۔ شیوسینا کے باغی لیڈر ایکناتھ شنڈے نے اپنے ساتھ 49/ایم ایل اے کی تصویر جاری کی ہے جس سے وزیراعلیٰ ادھو ٹھاکرے کی پریشانیوں میں مزید اضافہ ہوگیا ہے۔ دوسری جانب شیوسینا کے سنجے راوت نے کہا ہے کہ ہم این سی پی اور کانگریس سے اتحاد توڑنے کیلئے تیار ہیں۔ بس شنڈے ممبئی آئیں اور ادھو سے بات کریں۔ اس کے علاوہ خبر ہے کہ بی جے پی نے شنڈے کو حکومت بنانے کی پیشکش بھیجی ہے،جس سے شردپوار کی قیادت والی این سی پی ناراض ہوگئی ہے اوراعلان کردیاہے کہ ادھواسمبلی میں اپنی طاقت کا مظاہرہ کریں گے۔ مہاراشٹر میں جاری سیاسی بحران کے درمیان شیوسینا کے باغی ایم ایل اے لیڈر ایکناتھ شنڈے کا ایک ویڈیو سامنے آیا ہے۔ اس میں شنڈے تمام ایم ایل ایز سے بات چیت کر رہے ہیں۔ یہاں شنڈے نے ایم ایل اے سے کہا کہ ایک سپر پاور، ایک قومی پارٹی، ہمارے ہر فیصلے کے ساتھ کھڑی ہے۔ ایکناتھ کا اشارہ بی جے پی کی طرف تھا۔یہ بھی خبرآرہی ہے کہ ایکناتھ شنڈے گوہاٹی میں ہی شیوسینا لیجسلیچر پارٹی کے لیڈر بن سکتے ہیں۔ اس کے بعد اسپیکر کو ای میل یا خط لکھ کر اسمبلی میں اپنے دھڑے کو اصلی شیو سینا قرار دینے کا مطالبہ کر سکتے ہیں۔ اس منظر نامے کے ہونے کا سب سے زیادہ امکان ہے۔مہاراشٹر قانون ساز اسمبلی میں اسپیکر کا عہدہ 8ماہ سے خالی ہے۔ ان کی جگہ این سی پی کے نرہری سیتارام جھیروال کو ڈپٹی اسپیکر بنایا گیا ہے۔ اگر این سی پی ادھو کے ساتھ قائم رہتی ہے تو شیو سینا پر دعویٰ کرنے کی شنڈے کی اپیل لٹکنے کا زیادہ امکان ہے۔ایکناتھ شنڈے گورنر کے سامنے بی جے پی کی حمایت سے حکومت بنانے کا دعویٰ پیش کر سکتے ہیں۔ گورنر بھگت سنگھ کوشیاری کورونا سے متاثر ہیں۔ وہ ادھو حکومت کو فلورٹسٹ کرانے کی ہدایت دے سکتے ہیں۔ اگر فلورٹسٹ ہوتا ہے تو گیند دوبارہ اسپیکر کے کورٹ میں جائے گی اور اسپیکر شیو سینا کی اپیل پر شنڈے کیمپ کو انحراف مخالف قانون میں پھنسا سکتے ہیں۔ادھو کے خیمہ میں صرف 13/ایم ایل اے رہ گئے ہیں۔ باغی ایم ایل اے کو ممبئی بلانے کے پیچھے ادھو کیمپ کا کوئی پوشیدہ مقصد ہو سکتا ہے۔ وہ کسی نہ کسی طرح ممبئی بلا کر اپنے دربار میں باغیوں کو توڑنے کی کوشش کر سکتے ہیں۔ یہ ادھو کیمپ کی آخری امید بھی ہے۔


Recent Post

Popular Links