صدارتی انتخاب کیلئے دروپدی مرموکا مقابلہ یشونت سنہا سے

RushdaInfotech June 22nd 2022 urdu-news-paper
صدارتی انتخاب کیلئے  دروپدی مرموکا مقابلہ یشونت سنہا سے

نئی دہلی-21جون(ایجنسی)صدارتی انتخاب کیلئے حکمران این ڈی اے نے قبائلی طبقات سے آنے والی خاتون گورنر دروپدی مرمو کو اپنا امیدوار بنانے کا اعلان کیا ہے -جھارکھنڈکی سابق گورنر مرموکے نام کا چرچا کافی دنوں سے کیا جارہا تھا -ان کے مقابل اپوزیشن پارٹیوں کی میٹنگ میں امیدوار کا نام طے ہو گیا ہے اور سبھی پارٹیوں نے متفقہ طور پر یشونت سنہا کو بی جے پی امیدوار کے سامنے کھڑا کرنے کا اعلان کیا ہے- حالانکہ بی جے پی کی طرف سے فی الحال کسی امیدوار کے نام کا اعلان نہیں کیا گیا ہے، لیکن امید کی جا رہی ہے کہ آج شام ہونے والی بی جے پی پارلیمانی بورڈ کی میٹنگ میں کسی ایک نام پر مہر لگ جائے گا-اپوزیشن پارٹیوں کی آج ہوئی میٹنگ میں جئے رام رمیش، سدھیندر کلکرنی، دیپانکر بھٹاچاریہ، شرد پوار، ڈی راجہ، تروچی شیوا، پرفل پٹیل، یچوری، این کے پریم چندرن، منوج جھا، ملکارجن کھڑگے، رندیپ سرجے والا، حسنین مسعودی، ابھشیک بنرجی اور رام گوپال یادو وغیرہ شامل تھے- اے آئی ایم آئی ایم رکن پارلیمنٹ امتیاز جلیل بھی میٹنگ میں موجود تھے- امتیاز جلیل نے کہا کہ گزشتہ میٹنگ میں اے آئی ایم آئی ایم کو مدعو نہیں کیا گیا تھا اس لیے وہ نہیں آئے تھے-بہرحال ملک کے نئے صدر جمہوریہ کا انتخاب 18 جولائی کو ہونا ہے اور اپوزیشن کی طرف سے امیدوار بنائے گئے یشونت سنہا 27 جون کی صبح 11.30 بجے اپنا پرچہ نامزدگی داخل کریں گے- منگل کے روز اپوزیشن کی میٹنگ میں جب ترنمول کانگریس نے یشونت سنہا کا نام آگے بڑھایا تو 19 اپوزیشن پارٹیوں نے اس پر اتفاق کا اظہار کیا-قابل ذکر ہے کہ میٹنگ سے قبل یشونت سنہا نے ایک ٹوئٹ کیا تھا جس میں انھوں نے لکھا تھا کہ ترنمول کانگریس نے انھیں جو عزت اور احترام دیا ہے، اس کیلئے ممتا بنرجی کا شکرگزار ہوں - ٹوئٹ میں انھوں نے یہ بھی لکھا کہ ”اب وقت آ گیا ہے جب ایک بڑے قومی مقصد کیلئے مجھے پارٹی سے ہٹ کر اپوزیشن اتحاد کے لیے کام کرنا چاہئے-
مجھے یقین ہے کہ پارٹی میرے اس قدم کو قبول کرے گی“-دراصل یشونت سنہا نے ترنمول کانگریس سے استعفیٰ دینے کا اعلان کر دیا ہے- اس معاملے میں پارٹی کے اہم لیڈروں سے صلاح و مشورہ لینے کے بعد یشونت سنہا نے یہ فیصلہ کیا-


Recent Post

Popular Links