تلنگانہ اور آندھراپردیش میں شدید گرمی سے راحت کے کوئی آثار نظر نہیں

RushdaInfotech May 8th 2022 urdu-news-paper
تلنگانہ اور آندھراپردیش میں شدید گرمی سے راحت کے کوئی آثار نظر نہیں

حیدرآباد:7مئی(یواین آئی) تلنگانہ اور آندھراپردیش میں شدید گرمی سے راحت کے کوئی آثار نظر نہیں آرہے ہیں کیونکہ درجہ حرارت میں روز بروز اضافہ ہی ہوتا جارہا ہے۔دونوں ریاستوں کے اضلاع کے علاوہ مختلف مقامات پر شدید گرمی کی لہر دیکھی جارہی ہے۔محکمہ موسمیات نے پیش گوئی کی ہے کہ گرمی کی لہر آئندہ2تا3دن مزید برقرار رہے گی۔گرمی سے بچنے کے لئے لوگ مختلف تدابیر اختیار کررہے ہیں۔دوپہر کے وقت سڑکوں پر ٹرافک میں کمی دیکھی جارہی ہے۔واٹر کولرس، ایر کولرس کے علاوہ تھنڈی مشروبات کی فروخت میں بھی کافی اضافہ ہوگیا ہے۔ڈاکٹرس نے چھوٹے بچوں اور ضعیف افراد کو مشورہ دیا ہے کہ وہ گھروں میں ہی رہیں۔عوام کا کہنا ہے کہ گذشتہ برسوں کے مقابلے اس مرتبہ گرمی کافی ہے۔ صبح9بجے سے ہی شدید گرمی کا آغاز ہورہا ہے جو دوپہر میں اپنے عروج پر دیکھی جارہی ہے۔دونوں ریاستوں میں لو لگنے کے سبب اموات کا بھی پتہ چلا ہے۔دوسری طرف شدید گرمی کے سبب اسہال اور دست کی بھی شکایات مل رہی ہیں۔ٹھنڈی مشروبات کے ساتھ ساتھ او آر ایس کی پیکٹس ومشروبات کی فروخت بھی بڑھ گئی ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق گرمی کی لہر میں مزید اضافہ کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات کے عہدیداروں نے عوام کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنا خیال رکھیں اور ناگزیر ہونے پر ہی گھروں سے باہر نکلیں۔ تلنگانہ کے کئی مقامات کے علاوہ آندھراپردیش کے رائل سیما کے بعض مقامات اور ساحلی آندھراپردیش میں شدید گرمی کی لہر برقرار ہے۔ تلنگانہ کے اضلاع کریم نگر’کھمم اورنظام آباد میں دن کا درجہ حرارت زیادہ سے زیادہ ریکارڈ کیا جارہا ہے۔ دوسری طرف آندھراپردیش کے رائل سیما کے کئی مقامات پر بھی شدید گرمی برقرار ہے جہاں پر اعظم ترین درجہ حرارت42ڈگری سے بھی زائد ریکارڈ کیا گیا۔ آندھراپردیش کے پرکاشم’گنٹور’کرشنا’نیلور کے بعض مقامات میں بھی شدید گرمی ہے۔


Recent Post

Popular Links