بی جے پی اراکین اسمبلی کی نمائندگی والے حلقوں کو فنڈفراہم اپوزیشن پارٹی کے اراکین اسمبلی کی نمائندگی والے حلقے مسلسل نظرانداز:لنگیش

RushdaInfotech September 21st 2021 urdu-news-paper
بی جے پی اراکین اسمبلی کی نمائندگی والے حلقوں کو فنڈفراہم  اپوزیشن پارٹی کے اراکین اسمبلی کی نمائندگی والے حلقے مسلسل نظرانداز:لنگیش

بیلور:20ستمبر (سالارنیوز)بی جے پی اراکین اسمبلی کی نمائندگی والے حلقوں کیلئے حکومت کے فنڈ کی ندیاں بہہ رہی ہیں اور اپوزیشن پارٹی کے اراکین اسمبلی کے حلقوں کو مسلسل نظر انداز کیاجارہاہے۔یہ الزام رکن اسمبلی کے ایس لنگیش نے لگایا۔انہوں نے یہاں دبے گرام پنچایت میں تقریباً 9لاکھ روپئے کی لاگت سے تعمیر کی جارہی گرام پنچایت کی نئی عمارت کے تعمیری کام کا سنگ بنیاد رکھنے کے بعد جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مرکزی اور ریاستی حکومتیں صرف دولتمند طبقے،بڑے صنعت کاروں اورکارپوریٹس کے حق میں ہیں،ان کارپوریٹس کمپنیوں کے ہزاروں لاکھوں کروڑ قرض معاف کرسکتے ہیں،مگر غریبوں اور کسانوں کی مدد کیلئے ان سے کچھ نہیں ہوسکتا۔ایچ ڈی کمارسوامی جس وقت وزیر اعلیٰ تھے،کسانوں کے قرض معاف کرنے کا فیصلہ کیاتھا۔بی جے پی حکومت نے مخلوط حکومت میں جاری کردہ فنڈ کو روک رکھاہے اور انتقامی سیاست کرنے پر اترآئی ہے۔رکن اسمبلی نے کہاکہ قریوں کی ترقی سے ہی ملک کی ترقی ممکن ہوسکتی ہے۔ دبے پنچایت جے ڈی ایس کا مضبوط قلعہ ماناجاتاہے۔ آزادی کے 75 سال بعد بھی کئی قریے ایسے ہیں جو بنیادی سہولتوں سے بھی محروم ہیں،آج بھی کئی قریوں کیلئے پکی سڑکیں نہیں ہیں۔حکومت پر دباؤ ڈال کرفنڈ حاصل کرناپڑتاہے اور ترقیاتی کام کرنے پڑتے ہیں۔حکومت 5لاکھ گھر تعمیرکرنے کا منصوبہ بنانے کا اعلان کررہی ہے،مگر آج بھی لاکھوں خاندان بغیر چھت کے ہی زندگی گذاررہے ہیں۔ڈسٹرکٹ کوآپریٹیوبینک کے ڈائرکٹر ایم اے ناگراج نے کہاکہ ہمارے کام میں لگن اور ہمت ہوتو ضرور کامیابی ملے گی۔دبے گرام پنچایت کے صدر ناگیش پٹیل،اراکین اور افسروں نے متحد ہوکر کام کیاہے اور پچھلے بیس سال سے زیر التوا مسئلے کو حل کرتے ہوئے نئی عمارت تعمیرکرنے کا بیڑہ اٹھایاہے، جوقابل تعریف ہے۔گرام پنچایت صدر ناگیش پٹیل، آشاء کارکنوں اور تعمیری مزدوروں میں فوڈ کٹس تقسیم کئے گئے۔ اس موقع پر تعلقہ جے ڈی ایس صدر اننت سباراؤ،تعلقہ پنچایت کے سابق صدر اشوتھ اور دیگر موجودتھے۔


Recent Post

Popular Links