جاوید اختر کے ہتک عزت مقدمے پر روک لگانے کی مانگ کنگنا رناوت کی عرضی بمبئی ہائی کورٹ نے کی مسترد

RushdaInfotech September 10th 2021 urdu-news-paper
جاوید اختر کے ہتک عزت مقدمے پر روک لگانے کی مانگ کنگنا رناوت کی عرضی بمبئی ہائی کورٹ نے کی مسترد

ممبئی:9ستمبر (یو این آئی) نغمہ نگارجاوید اختر کی شکایت پر اداکارہ کنگنا رناوت کے خلاف شروع کی گئی مجرمانہ ہتک عزت کی کارروائی مسترد کرنے سے متعلق ان کی عرضی جمعرات کو ممبئی ہائی کورٹ نے مسترد کر دی۔جسٹس ریوتی موہیتے ڈیرے نے یکم ستمبر کو کنگنا رناوت کی عرضی پر حکم محفوظ رکھا تھا۔ عدالت نے آج فیصلہ سناتے ہوئے عرضی مسترد کردی۔ کنگنا رناوت نے اپنے وکیل رضوان صدیقی کے ذریعے ہتک عزت کی کارروائی کو چیلنج کیا تھا اور کہا تھا کہ ممبئی کے اندھیری میں واقع مجسٹریٹ عدالت نے اس معاملے میں اپنی صوابدید کا استعمال نہیں کیا۔ تاہم جاوید اختر کے وکیل جئے بھردواج نے بینچ سے کہا تھا کہ مجسٹریٹ نے اختر کی شکایت اور انٹرویو کے کچھ حصے پر غور کرنے کے بعد پولیس جانچ کا حکم دیا تھا۔ اس انٹرویو کے دوران کنگنا رناوت نے مبینہ طور پر ہتک آمیز تبصرے کئے تھے۔کنگنا نے صحافی ارنب گوسوامی کو ایک ٹیلی ویژن انٹرویو میں مبینہ طور پر اختر کے خلاف توہین آمیز اور بے بنیاد تبصرے کیے تھے جس کے خلاف مسٹر اختر نے اندھیری میٹروپولیٹن مجسٹریٹ کے سامنے گزشتہ سال نومبر کو شکایت درج کروائی تھی۔ عدالت نے دسمبر 2020 میں جوہو پولیس کو کنگنا کے خلاف مسٹراختر کی شکایت کی تحقیقات کرنے کی ہدایت دی اور پھر اس کے خلاف فوجداری کارروائی شروع کی گئی۔ اس سال فروری میں اسے سمن جاری کیا گیا تھا۔


Recent Post

Popular Links