آئین کی مخالفت کرنے والے انسانیت کے دشمن۔ سدرامیا

RushdaInfotech July 19th 2021 urdu-news-paper
آئین کی مخالفت کرنے والے انسانیت کے دشمن۔ سدرامیا

بنگلورو۔18/جولائی (سالارنیوز) ریاستی اپوزیشن لیڈر وسابق وزیراعلیٰ سدرامیا نے کہاکہ آئین کے خلاف کام کرنے والے انسانیت کے دشمن ہیں بلکہ وہ انسان کہلانے کے لائق ہی نہیں ہیں۔ یہاں اپنے گھر میں صحافی ایم ایس منی کی جانب سے لکھی گئی ”منو بھارت“ کتاب کا اجراء کرتے ہوئے سدرامیا نے اس خیال کا اظہارکیا۔ انہوں نے کہاکہ چند وزراء، اراکین پارلیمان اور اسمبلی ملک کے آئین میں تبدیلی کا مطالبہ کررہے ہیں لیکن میری نظر میں وہ عوامی منتخب نمائندے کہلانے کے اہل ہی نہیں ہیں۔ انہوں نے کہاکہ آج تعلیم یافتہ افراد کے اندر سیکولر اور انسانیت نواز خیالات کا فقدان ہے اور آئین کا گہرائی سے مطالعہ کرنے کی بجائے چند افراد آئین میں تبدیلی کی وکالت کررہے ہیں جو نا قابل قبول ہے۔ سدارامیا نے کہاکہ ملک کی اقتصادی صورتحال، جی ڈی پی میں گراوٹ، بے روزگاری، غربت کی سطح سے بھی نیچے رہنے والوں کے تعلق سے وزیراعظم نریندر مودی نے7/سال کے دوران ایک مرتبہ بھی اپنے خیالات کا اظہار نہیں کیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ نوٹ بندی کے بعد کی صورتحال، پٹرول، ڈیزل اور ضروری اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ کے خلاف عوام متحدہ آواز کیوں نہیں اٹھارہے ہیں اس کا جائزہ لینا ضروری ہے۔ انہوں نے بتایاکہ سماجی اور تعلیمی طور پر پسماندہ طبقات کے لئے آئین میں ریزرویشن کی سہولت فراہم کی گئی ہے لیکن آج بھی ملک میں ان طبقات کے ساتھ امتیازانہ سلوک برابر جاری ہے۔ اس موقع پر سابق وزیر ایچ ایم ریونا، ڈاکٹر ایچ سی مہادیوپا، رکن اسمبلی راگھویندرا ہٹنال، پسماندہ طبقات کمیشن کے سابق صدر کانت راجو، میڈیا اکیڈمی کے سابق صدر سدراجو، ڈاکٹر بی کے روی ودیگر حاضر رہے۔


Recent Post

Popular Links