سورنا ودھا سودھا کو حکومت کرایہ پر دے دے: شیو کمار ایک ہفتہ میں ریاست میں بڑی سیاسی تبدیلی ممکن:کے پی سی سی صدر کا اشارہ

RushdaInfotech July 19th 2021 urdu-news-paper
سورنا ودھا سودھا کو حکومت کرایہ پر دے دے: شیو کمار ایک ہفتہ میں ریاست میں بڑی سیاسی تبدیلی ممکن:کے پی سی سی صدر کا اشارہ

بنگلورو18جولائی(سالار نیوز)بیلگاوی میں تعمیر شدہ سورنا ودھان سودھا میں رواں سال کا مانسون لیجس لیچر اجلاس کروانے کی مانگ کرتے ہوئے کرناٹک پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر ڈی کے شیو کمار نے کہا کہ اس عمارت کو کروڑوں روپے کی لاگت سے تعمیر کیا گیا ہے حکومت اگر اس کا سرکاری مقاصدکے لئے استعمال کرنا نہیں چاہتی اور وہاں لیجس لیچر کا اجلاس نہیں کیا جاسکتا تو بہتر ہے کہ اس عمارت کو کرائے پر دیدیا جائے۔ اخباری نمائندو ں سے با ت کرتے ہوئے شیو کمار نے کہا کہ گزشتہ دوسال سے بیلگاوی کے سورنا سودھا میں لیجس لیچر کا اجلاس نہیں ہو رہا ہے۔ اس عمارت میں قیمتی میز اور کرسیاں گردو غبار کے حوالے ہو رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شمالی کرناٹک کے تئیں ریاستی حکومت کی لاپروائی کا مظہر ہے کہ وہ بیلگاوی میں لیجس لیچر اجلاس کا اہتمام کرنے سے گریز کر رہی ہے۔ کانگریس میں عہدہ وزیر اعلیٰ کے لئے جاری رسہ کشی کے متعلق نائب وزیر اعلیٰ گووند کارجول کے بیان پر کہ کانگریس کے لوگ شادی سے پہلے ہی بچے کی لڑائی میں لگ گئے ہیں شیو کمار نے کہا کہ نائب وزیر اعلیٰ یہ جانتے ہیں کہ بچہ ضرور ہو گا اس لئے انہوں نے ایسا بیان دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کی طاقت کے بارے میں کارجول کی مثبت سوچ کا وہ خیر مقدم کرتے ہیں۔کرناٹک میں وسط مدتی انتخابات کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں ڈی کے شیو کمار نے حیرت انگیز جواب دیا کہ ایک ہفتہ انتظار کریں۔ سیاسی تبدیلیاں از خود سامنے آئیں گی۔ وزیر اعلیٰ کے عہدے سے ایڈی یورپا کو بے دخل کرنے اور ان کی جگہ کسی اور کو وزیر اعلیٰ بنائے جانے کے بار ے میں قیاس آرائیوں پر شیو کمار نے کہا کہ یہ بی جے پی کا داخلہ معاملہ ہے اس پر وہ بحث میں شامل ہونا نہیں چاہتے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا کی قیاد ت کو بی جے پی کے اراکین اسمبلی کی طرف سے ہی راست چیلنج دیا جا رہا ہے جبکہ اس پربی جے پی اعلیٰ کمان خاموش ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت نے پارلیمنٹ اجلاس بلا لیا ہے لیکن ریاستی حکومت اسمبلی اجلاس طلب کرنے یا کابینہ اجلاس کا مسلسل اہتمام کرنے میں سنجیدگی نہیں دکھا رہی ہے۔


Recent Post

Popular Links