تمام تعلقہ اسپتالوں کو فی کس 6وینٹی لیٹرس عنقریب2,480ڈاکٹروں کا راست تقرر۔سدھاکر

RushdaInfotech May 13th 2021 urdu-news-paper
تمام تعلقہ اسپتالوں کو فی کس 6وینٹی لیٹرس عنقریب2,480ڈاکٹروں کا راست تقرر۔سدھاکر

بنگلورو۔12/مئی (سالارنیوز) ریاست کے تمام تعلقہ اسپتالوں میں وینٹی لیٹرس اور دیگر ٹیکنیکل سہولتیں مہیا کروانے کے لئے کل 2,480 ڈاکٹروں کی فوری ضرورت ہے۔ریاستی وزیر برائے صحت و خاندانی بہبود ڈاکٹر کے سدھاکر نے یہ اطلاع دی ہے۔ بنگلورو کے مضافات میں کے آر پورم ہوسکوٹے، چک بالا پور اور چنتا منی کے اسپتالوں کا دورہ کرکے کووڈ مریضوں کے علاج کے لئے دستیاب بنیادی سہولتوں کا معائنہ کرنے کے بعد یہ اطلاع دی۔انہوں نے بتایا کہ پچھلے ساڑھے6مہینوں کے دوران ہر تعلقہ اسپتال میں 50آکسیجن بیڈس، 6وینٹی لیٹرس نصب کئے گئے ہیں۔لیکن چند اسپتالوں میں اس کو مکمل نہیں کیاگیا ہے۔جن اسپتالوں میں ٹیکنیکل اسٹاف نہیں وہاں فوری ٹیکنیکل اسٹاف مہیا کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔بشمول720ٹیکنیکل اسٹاف کل2,480ڈاکٹروں کا راست تقرر کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایابنگلور میں کووڈ اگلے چند دنوں میں تیزی سے پھیلے گا، دیہی علاقوں میں بھی یہ وباء اب پھیلنے لگی ہے۔ اس پر ماہرین کے اجلاس میں تفصیلی بحث ہوئی ہے۔جن پڑوسی اضلاع کے اسپتالوں میں بنیادی سہولتیں ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ہوسکوٹے کی ایم وی جی اسپتال کو 10وینٹی لیٹرس فراہم کئے گئے ہیں۔مزید 10وینٹی لیٹرس طلب کئے گئے ہیں۔ عنقریب مہیا کئے جائیں گے۔ایک نئے اسپتال اسٹیپ ڈاؤن کو کووڈ مریضوں کے علاج کے لئے روانہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ کورونا سے متاثر اکثر مریض اسپتالوں کو جانے میں تاخیر کرتے ہیں جس کی وجہ سے اموات میں اضافہ ہوا ہے۔کووڈ پازیٹیو رپورٹ آنے کے فوری بعد علاج شروع کردینا چاہئے۔جو متاثرین اپنا علاج گھروں میں کروا رہے ہیں، روزانہ ڈاکٹروں سے اپنا معائنہ کروانا چاہئے۔


Recent Post

Popular Links