بنگال میں دیدی اور تمل ناڈو میں ڈ ی ایم کے کیرلا میں ایل ڈی ایف اور آسام میں بی جے پی کی واپسی۔پڈوچیری میں این ڈی اے کی سبقت

RushdaInfotech May 3rd 2021 urdu-news-paper
بنگال میں دیدی اور تمل ناڈو میں ڈ ی ایم کے   کیرلا میں ایل ڈی ایف اور آسام میں بی جے پی کی واپسی۔پڈوچیری میں این ڈی اے کی سبقت

نئی دہلی،2مئی(ایجنسی)5 ریاستوں میں ہوئے اسمبلی انتخابات کے نتائج تقریباًسامنے آچکے ہیں۔ممتابنرجی کی انتھک کوشش کے نتیجہ میں ٹی ایم سی نے مغربی بنگال میں 215کا ہندسہ عبورکرلیا ہے جب کہ پوری طاقت جھونک دینے والی اوردوسوسیٹوں کادعویٰ کرنے والی بی جے پی سترکے قریب ہے۔مغربی بنگال میں بی جے پی نے مرکزی وزراء تک کوالیکشن لڑنے کیلئے اتار دیا تھا۔ وزیر اعظم، اور وزیر داخلہ سمیت مرکزی وزراء، متعدد ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ اور سنیئر لیڈرس دن رات ایک کیے ہوئے تھے لیکن ممتابنرجی کے آگے کسی کی ایک نہ چلی۔بی جے پی نے 200سیٹوں کادعویٰ کیاتھاجب کہ وہ صرف 70کے آس پاس تک پہنچ رہی ہے۔ مغربی بنگال اسمبلی انتخابات میں حکمراں ترنمول کانگریس کاواضح اکثریت کے ساتھ دوبارہ اقتدار حاصل کرناطے ہے جبکہ آسام میں بی جے پی کے زیرقیادت قومی جمہوری اتحاد اور تمل ناڈومیں اپوزیشن کے ڈی ایم کے کے زیرقیادت اتحادمکمل اکثریت کے ساتھ سرکاربنائے گا۔کیرلا میں حکمراں لیفٹ پارٹی کی ہی واپسی ہوئی ہے۔پڈوچیری میں این ڈی اے کی سرکاربنے گی۔ اس درمیان ممتابنرجی پرکنفیوژ ن پھیلاہواہے۔کبھی ان کی فتح اورکبھی ان کی شکست کی اطلاع آرہی ہے۔ الیکشن کمیشن نے انہیں شکست خوردہ بتایاہے،جس پر ترنمول نے کہاہے کہ وہ اسے چیلنج کرے گی۔اس سے الیکشن کمیشن پرکئی طرح کے سوال کھڑے ہورہے ہیں اوربہارالیکشن کے نتائج کاحوالہ دیاجارہاہے۔ اتوارکے روزچارریاستوں اور ایک مرکزی علاقے میں ووٹوں کی گنتی ہوئی ہے جب ملک میں کورونا وائرس کے انفیکشن کے سنگین بحران کاسامنا ہے۔تمل ناڈو میں ڈی ایم کے کے زیرقیادت اتحاد سرکاربنائے گا۔حکمراں بی جے پی کے زیر قیادت این ڈی اے نے آسام میں برتری حاصل کرلی ہے۔الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ پر بہت تاخیرسے نتائج آرہے ہیں۔جس پرکئی طرح کے سوال بھی کھڑے ہورہے ہیں۔وزیراعلیٰ سربانند سونووال نے اعتماد کا اظہار کیا ہے کہ بی جے پی کی زیرقیادت اتحاد ریاست میں دوبارہ اقتدار میں آئے گا۔آسام میں اسمبلی کی 126 نشستیں ہیں اور اکثریت کو 64 نشستوں کی ضرورت ہے۔بیشتر ایگزٹ پول میں مغربی بنگال میں ترنمول کانگریس اور بی جے پی کے مابین سخت لڑائی کی پیش گوئی کی گئی تھی۔ دوسری طرف آسام میں این ڈی اے کی فتح اور کیرلا میں بائیں بازو کے محاذ کے اقتدار میں رہنے کی پیش گوئی کی گئی ہے۔ تمل ناڈو میں، ڈی ایم کے اور کانگریس کی سربراہی میں اتحاد کی کامیابی ہوئی ہے۔کانگریس کیلئے خوشخبری صرف تمل ناڈو سے ہے جہاں ڈی ایم کے زیر قیادت اتحاد کی فتح ہوئی ہے۔


Recent Post

Popular Links