مدارس ملت کی بقاوتحفظ کی ضمانت:مولانا محمود مدنی

RushdaInfotech March 7th 2022 urdu-news-paper
مدارس ملت کی بقاوتحفظ کی ضمانت:مولانا محمود مدنی

نئی دہلی-6مارچ(ایجنسی)مدارس ملت اسلامیہ کے تحفظ و بقا کی ضمانت ہیں، ہمارے بزرگوں نے جو کارنامہ انجام دیا ہے وہ مدارس اسلامیہ کی شکل میں ہے۔ ان میں جتنا کام ہو رہا ہے اس سے اور اچھا ہونا چاہئے۔ ہماری ذمہ داری ہے کہ مدارس اسلامیہ میں مزید اچھا کام ہو جس کے لیے ہمیں مدارس اسلامیہ کی جملہ ضروریات پورا کرنے کی ضرورت ہے۔ ان خیالات کااظہارجمعیۃ علماء ہند کے قومی صدرمولانا محمود مدنی نے گزشتہ شب جعفرآباد میں واقع مدرسہ باب العلوم میں جلسہ دستاد بندی کے موقع پر کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ بارگاہ الٰہی میں نفسی نفسی ہوگی اور ماں باپ، بھائی بہن بھی ایک دوسرے کے کام نہیں آئیں گے اور اس نفسی نفسی کی صورت میں حافظ قرآن ہی بخشش کا ذریعہ بنیں گے۔مولانا محمود مدنی نے کہا کہ حفاظ کی یادداشت میں 700 گنا اضافہ ہو جاتا ہے جس کے نتیجہ میں حافظ قرآن دنیاوی تعلیم کی حصولیابی میں دوسرے بچوں سے زیادہ ترقی کرتا ہے جس کے مدنظر حافظ بنا کر ان کے والدین کو اعلیٰ عصری تعلیم دلانی چاہئے اور یہ موجودہ حالات کا تقاضہ بھی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ وقت ہمیں بیدار کر کے آواز دے رہا ہے۔ اگر ہم بیدار ہو کر اللہ کی طرف رجوع ہو جائیں تو ہمیں کھویا ہوا مقام حاصل ہو جائے گا جس کے لیے علما کرام کو آگے آنا پڑے گا۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ ہمارے غلط رویے سے معاشرہ متاثر ہوتا ہے اور اللہ کی مدد بھی نہیں ہوتی جبکہ اللہ کی مدد کے لیے ہمیں بدلنے کے لیے جدوجہد کرنی پڑے گی تبھی اللہ کی مدد شامل ہو سکے گی-


Recent Post

Popular Links