کسانوں کے رخ میں بھی آیا بدلاؤ 29نومبر کوہونے والا ”کسان مارچ“ ملتوی،آندولن جاری رہے گا

RushdaInfotech November 28th 2021 urdu-news-paper
 کسانوں کے رخ میں بھی آیا بدلاؤ  29نومبر کوہونے والا ”کسان مارچ“ ملتوی،آندولن جاری رہے گا

نئی دہلی:27نومبر(ایجنسی) زرعی قوانین کے خلاف آندولن کررہے کسانوں نے اپنے رخ میں نرمی دکھائی ہے - سنیکت کسان مورچہ نے ایک بڑا فیصلہ لیتے ہوئے پارلیمنٹ سرمائی اجلاس کے پہلے دن یعنی 29نومبرکو پارلیمان تک ٹریکٹر ریلی کے فیصلہ کو ملتوی کردیاہے - اس بات کی جانکاری سنیکت کسان مورچہ کے لیڈر درشن پال سنگھ نے دی - حالانکہ انہوں نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ ہم نے ٹریکٹر ریلی کو ٹالا ہے اور ختم نہیں کیا -کسان لیڈر درشن پال نے پریس کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسان تنظیم آگے کی حکمت عملی کیلئے 4دسمبر کو میٹنگ کرے گی اور اس کے بعد آگے کے پروگرام طے کئے جائیں گے - انہوں نے کہا کہ سرکار نے ہم سے کہا ہے کہ 29نومبر کو پارلیمنٹ میں زرعی قوانین پوری طرح سے رد ہوجائیں گے - انہوں نے بتایا کہ ہم نے وزیر اعظم مودی کو خط لکھا ہے اور اس میں کسانوں کی کئی مانگوں کو اٹھایا ہے -انہوں نے کہا کہ ہم نے خط میں مانگ کی ہے کہ کسانوں کے خلاف جو بھی مقدمے درج کئے گئے ہیں، انہیں واپس لیا جائے - کسانوں کو مناسب دام ملیں اس کیلئے ایم ایس پی کی گیارنٹی دی جائے - کسان آندولن کے دوران جو کسان شہید ہوئے ان کے کنبہ کو معاوضہ دیا جائے اور کسانوں کا بجلی بل بھی رد کیا جائے - کسان لیڈر نے کہا کہ سرکار کو کسانوں کے ساتھ ایک مرتبہ پھر سے بات چیت کیلئے آگے آنا ہوگا - جب تک ہماری مانگیں پوری نہیں ہو جائیں گی، وہ واپس نہیں جائیں گے -درشن پال نے کہا کہ ہم نے جو خط وزیر اعظم کو لکھا ہے کہ اس کے جواب کا 4 دسمبر تک انتظار کریں گے اور اس کے بعد ہی ہم طے کریں گے کہ ہمیں اگلا قدم کس طرف بڑھانا ہے - انہوں نے کہا کہ اس لئے ایسا نہیں ماننا چاہئے کہ ہم نے ٹریکٹر ریلی کو پوری طرح سے ختم کردیا ہے - انہوں نے کہا کہ صرف کہنے سے کام نہیں چلے گا، سرکار کو کوئی ٹھوس قدم اٹھانا ہوگا -
واضح رہے کہ مرکزی حکومت پیر سے شروع ہورہے پارلیمنٹ کے سرمائی سیشن کے زرعی قوانین کو رد کرنے کیلئے بل پیش کرے گی - دونوں ایوانوں سے بل پاس ہونے کے بعد سرکار اس کو صدر جمہوریہ کے پاس بھیجے گی اور پھر صدر جمہوریہ سے منظوری ملنے کے بعد زرعی قوانین کو رد کردیا جائے گا -


Recent Post

Popular Links