کابل ایئر پورٹ پر خود کش حملہ کرنے والا دہشت گرد 5سال پہلے دہلی میں ہوا تھا گرفتار

RushdaInfotech September 20th 2021 urdu-news-paper
کابل ایئر پورٹ پر خود کش حملہ کرنے والا  دہشت گرد 5سال پہلے دہلی میں ہوا تھا گرفتار

نئی دہلی-19ستمبر(ایجنسی)دہشت گرد تنظیم اسلامک اسٹیٹ خراسان صوبہ نے دعویٰ کیا ہے کہ گزشتہ ماہ افغانستان کی راجدھانی کابل میں خود کش حملہ کرنے والا دہشت گرد5 سال پہلے ہندوستان میں قید تھا، اسے قومی دارالحکومت دہلی میں پکڑا گیا تھا- آئی ایس کے پی نے اپنی ایک پروپیگنڈہ میگزین میں دعویٰ کیا ہے کہ ہندوستان میں پکڑے گئے اس دہشت گرد کو کچھ وقت بعد افغانستان بھیج دیا گیا تھا- آئی ایس کے پی نے دعویٰ کیا ہے کہ خود کش حملہ آور کا نام عبدالرحمن الغوری تھا- بتایا جاتا ہے کہ وہ کشمیر میں حملہ کرنے کے مقصد سے ہندوستان میں آیا تھا، حالانکہ اسے پکڑ لیا گیا- واضح رہے کہ کابل واقع حامد کرزئی بین الاقوامی ایئر پورٹ کے باہر گزشتہ ماہ حملہ ایسے وقت میں ہوا تھا جب ہزاروں کی تعداد میں افغانی شہری ملک چھوڑ کر باہر جانے کیلئے یہاں پہنچے تھے- اس حملے میں 200 سے زیادہ افراد جاں بحق ہوئے تھے، جس میں 13/امریکی مرین کمانڈر بھی شامل تھے-آن لائن نیوز18کی ایک رپورٹ کے مطابق اس دعوے نے ہندوستانی خفیہ ایجنسیوں کی پیشانی پر تشویش کی لکیریں کھینچ دی ہیں، کیونکہ سال 2016 کے آس پاس حقیقت میں ایک آپریشن ہوا تھا، جس میں اسٹوڈنٹ کے طور پر دہلی میں رہ رہا شخص گرفتار کیا گیا تھا- اسے دہلی ہریانہ سرحد پر واقع ایک کالج سے پکڑا گیا تھا- آئی ایس کے پی کی میگزین میں شائع کالم میں کہا گیا ہے کہ بھائی کو پانچ سال پہلے ہندوستان میں گرفتار کیا گیا تھا- وہ ایک فدائین)خود کش حملہ آور(آپریشن کرنے کیلئے دہلی گیا تھا- بھائی کو افغانستان بھیج دیا گیا، لیکن اس نے گھر نہ جاکر اپنا آپریشن پورا کیا-مضمون میں کہا گیاکہ بھائی کو تب گرفتار کیا گیا تھا، جب وہ کشمیر کا بدلہ لینے کیلئے گایوں کی عبادت کرنے والے ہندوؤں پر ایک فدائین آپریشن کرنے کے مقصد سے دہلی گیا تھا، لیکن اللہ نے دوسرا فیصلہ کیا اور بھائی کا قید میں امتحان ہوا- پھر اسے افغانستان بھیج دیا- اللہ سے کئے اپنے وعدے پر کھرا اترتے ہوئے بھائی گھر نہیں گیا، بلکہ اس نے اپنا آپریشن کیا، اس کا دل پر سکون اور خوشی سے بھرگیا-


Recent Post

Popular Links