باگے پلی ٹاؤن منسپل کونسل کابجٹ اجلاس

RushdaInfotech April 2nd 2021 urdu-news-paper
باگے پلی ٹاؤن منسپل کونسل کابجٹ اجلاس

باگے پلی۔یکم اپریل (نامہ نگار)سال برائے2021-22 کیلئے ٹاؤن منسپل کونسل کا20 لاکھ 54 ہزار روپئے منافع بجٹ پیش کیاگیا۔منسپل کونسل کی صدر گلناز بیگم نے کونسل کے میٹنگ ہال میں طلب کئے گئے خصوصی اجلاس میں بجٹ پیش کیا۔اس موقع پر انہوں نے بتایاکہ اس سال کل آمدنی 12 کروڑ 73 لاکھ 17 ہزار 481 روپے ہونے کا اندازا لگایا گیاہے،جس میں سے 12کروڑ 52 لاکھ63 ہزار100 روپے خرچ ہونے کا اندازہ ہے۔ اس سال 20 لاکھ54 ہزار 381 روپے کی بچت ہوگی۔اس طرح سے یہ منافع بجٹ ہوگا۔ گلناز بیگم نے اس سال منسپالٹی کو آمدنی ہونے والے ذرائع کے بارے میں تفصیل پیش کرتے ہوئے بتایا کہ ٹیکس وصولی سے 1.2 کروڑروپئے، منسپل کی دکانوں کے کرایوں سے 25 لاکھ روپئے، پانی کے ٹیکس سے98.5 لاکھ، لائسنس فیس سے 6 لاکھ، نلم گرانٹ سے 30 لاکھ، ایس ایف سی گرانٹ سے1.5 کروڑ،بجلی کیلئے ایس ایف سی گرانٹ سے 3 کروڑ اور ایس ایف سی گرانٹ 60 لاکھ روپے سمیت کئی اور ذرائع سے آمدنی ہونے کا اندازہ لگایا گیا ہے۔منسپل صدر نے اس سال ہونے والے اخراجات کی تفصیلات پیش کرتے ہوئے بتایا کہ منسپل اسٹاف کی تنخواہوں کیلئے1.59 /کروڑ، اسٹریٹ لائٹ کی تنصیب اور درستگی،پمپ ہاؤز میں بجلی کی فراہمی و دیکھ بھال کیلئے 2.64 کروڑ، صفائی کرمچاریوں کی تنخواہوں و ناشتہ کے انتظام کیلئے 37 لاکھ،کیچڑ پاک کرنے والی گاڑیوں کی خریدی کیلئے 5 لاکھ،ٹاؤ ن میں پارکوں کی ترقی کیلئے 30 لاکھ روپئے، دفتر کیلئے ضروری اشیاء خریدنے کیلئے 10 لاکھ،راستوں کے کنارے ڈرینج کی تعمیر کیلئے 1.56کروڑ، اسٹریٹ لائٹ اور سگنل لائٹ نصب کرنے 18لاکھ، پانی کی سربراہی، پائپ لائن و دیگر اشیاء کی خریدی کیلئے 2.34 کروڑ،ا یس سی ایس ٹی کالونی میں راستوں اور ڈرائنیج کی تعمیر کیلئے 25.5 لاکھ، انفرادی بیت الخلاء کی تعمیر کیلئے امداد کے طور پر 10 لاکھ اورٹاؤن میں سوئمنگ پول کی تعمیر کیلئے 30 لاکھ روپے مختص کئے گئے ہیں۔ اس اجلاس کی شروعات میں ہی کونسلرس نے مانگ کی کہ کندایہ وصول کرنے میں منسپل افسرناکام ہوچکے ہیں اور کاہلی برت رہے ہیں۔ہر سال ٹیکس سے 2.5 کروڑ وصول ہونا ہے مگر افسروں اور اسٹاف ہر سال صرف 1.14 کروڑ ہی وصول کرپارہے ہیں جس سے50 فیصد رقم بھی وصول نہیں ہوپارہی ہے۔ اس سلسلہ میں کونسلرس کے درمیان لفظی جھڑپ بھی ہوئی۔اس اجلاس میں چیف آفیسر پنکجا ریڈی، نائب صدر سرینواس، اسٹانڈنگ کمیٹی چیرمین ننجنڈاپا سمیت کونسلرس و افسر موجود رہے۔


Recent Post

Popular Links