بے روزگاری عروج پر،غیررسمی شعبہ پریشان حکمت عملی کے بغیر نوٹ بندی کے فیصلے کی وجہ سے سارے شعبے تباہ:منموہن سنگھ

RushdaInfotech March 3rd 2021 urdu-news-paper
بے روزگاری عروج پر،غیررسمی شعبہ پریشان حکمت عملی کے بغیر نوٹ بندی کے فیصلے کی وجہ سے سارے شعبے تباہ:منموہن سنگھ

ترووننت پورم،2مارچ(ایجنسی) سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ نے آج مرکزی حکومت پر حملہ کرتے ہوئے کہاہے کہ 2016 میں بغیرسمجھے نوٹ بندی کے فیصلے سے ملک میں بے روزگاری عروج پر ہے اور غیر رسمی شعبہ پریشانی کا شکار ہے۔انہوں نے ریاست میں مستقل طورپرمشورہ نہ کرنے پر مرکز میں مودی حکومت کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔ سنگھ نے اقتصادی مضامین کے ’تھنک ٹینک‘ راجیوگاندھی انسٹی ٹیوٹ آف ڈولپمنٹ اسٹڈیز کے ذریعہ ڈیجیٹل میڈیم کے ذریعے منعقدہ ایک ترقیاتی کانفرنس کا افتتاح کرتے ہوئے یہ باتیں کیں۔ انہوں نے کہاہے کہ بڑھتے ہوئے مالی بحران کو چھپانے کیلئے ہندوستان کی حکومت اورریزرو بینک آف انڈیا (آر بی آئی) اٹھائے گئے عارضی اقدامات کی وجہ سے چھوٹے اور درمیانے درجے کے شعبوں کومتاثر کرسکتا ہے اور ہم اس صورتحال کو نظر انداز نہیں کرسکتے ہیں۔انھوں نے کہاہے کہ بے روزگاری عروج پر ہے اورغیر رسمی شعبہ تباہ ہواہے۔یہ بحران 2016 میں بغیر سوچے سمجھے نوٹ بندی کے فیصلے کی وجہ سے پیدا ہوا ہے۔ اس کانفرنس کاانعقادکیرلا میں اسمبلی انتخابات سے قبل ایک ویژن پیپر، ریاست کی ترقی سے متعلق خیالات کی شکل پیش کرنے کیلئے کیاگیاہے۔


Recent Post

Popular Links