ٹول کٹ کیس:ماحولیاتی کارکن دیشاروی کوملی ضمانت

RushdaInfotech February 24th 2021 urdu-news-paper
ٹول کٹ کیس:ماحولیاتی کارکن دیشاروی کوملی ضمانت

نئی دہلی، 23فروری (یو این آئی) دہلی ہائی کورٹ نے منگل کو ٹول کٹ معاملہ میں بنگلورو کی ماحولیاتی کارکن دیشا روی کی ضمانت منظور کرتے ہوئے کہاکہ محترمہ روی کے خلاف کافی شواہد نہیں ہیں۔ایڈیشنل سیشن جج دھرمیندر رانا نے ضمانت منظور کرتے ہوئے کہاکہ غیرواضح شواہد کے پیش نظر مجھے ضمانت منظورکرنے سے منع کرنے کی کوئی ٹھوس وجہ نظر نہیں آرہی ہے۔انہوں نے محترروی کی ضمانت منظور کرتے ہوئے ہدایت دیتے ہوئے محترمہ روی سے ایک لاکھ روپے کی ضمانت بانڈ اور دو اضافی مچلکے پیش کرنے کے لئے کہا۔محترمہ روی کی طرف سے عدالت میں پیش ہوئے وکیل ابھینو شیکھری نے جج سے ضمانت کی رقم کم کرکے 50ہزار روپے کرنے کی اپیل کی جسے جج نے نامنظور کردیا۔اس سے قبل دہلی پولیس نے منگل کو مقامی عدالت میں درخواست دائر کرکے محترمہ دیشا روی کی پولیس تحویل میں مزید چار دنوں کی توسیع کی مانگ کی جسے مجسٹریٹ نے مسترد کردیا۔اس سے قبل 20 فروری کو دہلی پولیس نے کہاتھا کہ محترمہ روی خالصتان کی وکالت کرنے والوں کے ساتھ مل کر ایک ٹول کٹ تیار کررہی تھیں۔ یہ ہندوستان کو بدنام کرنے والے عالمی سازش اور کسانوں کی تحریک کی آڑ میں ملک میں بدامنی پھیلانے کی کوشش کرنے کا حصہ ہے۔اس سے قبل 14 فروری کو محترمہ روی کو مقامی عدالت نے پانچ دنوں کے لئے پولیس تحویل میں بھیج دیا تھا۔ اس وقت تفتیشی ایجنسی نے کہا تھا کہ مرکزی حکومت کے خلاف وسیع تر سازش اور خالصتان تحریک میں ان کے کردار کی تحقیقات کے لئے پولیس تحویل ضروری ہے۔محترمہ روی کو دہلی پولیس کے سائبر سیل نے 13 فروری کو بنگلور سے گرفتار کیا تھا اور اسے دہلی کی ایک عدالت میں پیش کرکے سات دنوں کی پولیس حراست کی مانگ کی تھی۔


Recent Post

Popular Links