یوپی -بہار کا بجٹ، گائے اور مند رکا جلوہ برقرار - یوپی میں ایودھیا کیلئے300کروڑ، بہار میں گایوں کیلئے500کروڑمختص

RushdaInfotech February 23rd 2021 urdu-news-paper
یوپی -بہار کا بجٹ، گائے اور مند رکا جلوہ برقرار - یوپی میں ایودھیا کیلئے300کروڑ، بہار میں گایوں کیلئے500کروڑمختص

نئی دہلی-22فروری(ایجنسی) یوپی حکومت کے وزیر خزانہ سریش کھنہ نے اپنی حکومت کا پانچواں مکمل بجٹ 2021-22 /اسمبلی میں پیش کیا- اس سیشن کا کل بجٹ 5 لاکھ 50 ہزار 270 کروڑ ہے-جب کہ مدھیہ پردیش، اترپردیش، بہار اور چھتیس گڑھ میں بجٹ اجلاس شروع ہوچکا ہے- وزیر خزانہ سریش کھنہ نے ملک کی سب سے بڑی ریاست یوپی میں 5.50 لاکھ کروڑ کا بجٹ پیش کیا- دوسری طرف بجٹ اجلاس شروع ہوتے ہی بہاراسمبلی میں ہنگامہ بپا ہوا- قائد حزب اختلاف تیجسوی یادو نے اسمبلی میں پیپر لیک ہونے کا معاملہ اٹھایا- اسی دوران، مدھیہ پردیش میں ایوان کی کارروائی سے قبل، کانگریس کے ایم ایل اے، پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کیخلاف احتجاج کرتے ہوئے سائیکل سے اسمبلی پہنچے-جب کہ چھتیس گڑھ میں صبح 11 بجے بجٹ اجلاس شروع ہوا-غور طلب ہے کہ اترپردیش میں پچھلی بار کے مقابلے میں 38 ہزار کروڑ زیادہ کا بجٹ پیش کیا گیا ہے- یوگی سرکار کے وزیر خزانہ سریش کھنہ نے اپنی حکومت کا 5 واں بجٹ 2021-22 اسمبلی میں پیش کیا- اس سیشن کا کل بجٹ 5 لاکھ 50 ہزار 270 کروڑ ہے، جبکہ 2021-22 میں بجٹ 5.12 لاکھ کروڑ روپے تھا- اس سال بجٹ 38 ہزار کروڑ زیادہ ہے- رام جنم بھومی مندر (ایودھیا دھام) تک لنک روڈ بنانے کیلئے 300 کروڑ روپئے کا بجٹ مختص کیا گیا ہے- اس کے ساتھ ہی ایودھیا میں سیاحت کی ترقی کیلئے بھی 100 کروڑ دیئے جائیں گے- وارانسی میں سیاحت کی سہولیات کی ترقی میں 100 ملین خرچ ہوں گے-جب کہ بہار بجٹ میں جانوروں کیلئے ہر 8-10 پنچایتوں کیلئے اسپتال اور دیہی مویشیوں کیلئے گایوں کیلئے انسٹی ٹیوٹ کا بندوبست کرنے کیلئے 500 کروڑ روپئے کا بجٹ دیا گیا ہے- اس سے قبل اسمبلی میں قائد حزب اختلاف تیجسوی یادو نے میٹرک کے امتحان میں پیپر لیک ہونے کا معاملہ اٹھایا تھا- تیجسوی ٹریکٹر کے ذریعہ اسمبلی پہنچے،لیکن انہیں اندر جانے کی اجازت نہیں ملی-


Recent Post

Popular Links