بے روزگار نوجوانوں کو کروڑوں روپئے کا دھوکہ

RushdaInfotech December 2nd 2020 urdu-news-paper
بے روزگار نوجوانوں کو کروڑوں روپئے کا دھوکہ

کولیگال۔یکم دسمبر(سالارنیوز)بے روزگاروں کو سرکاری ملازمت دلانے کا جھانسہ دے کر ریاست کے کئی اضلاع میں کروڑوں روپئے کی رقم لوٹنے اور دھوکہ دینے کے الزامات کاسامناکررہے بنگلور شہر کے پربھاکر نامی شخص کے خلاف شہر میں بھی کئی افراد نے شکایت درج کرائی ہے۔ بنگلور،چکمگلور،منڈیا، میسور سمیت مختلف شہروں میں ملزم کے خلاف معاملے درج ہیں۔پربھاکر (34) کو چکمگلور پولیس نے حال ہی میں گرفتار کیاہے،اس کی گرفتاری کی خبر پھیلتے ہی تعلقہ کے لوگ جنہیں پربھاکر نے دھوکہ دیاہے اور رقم حاصل کی ہے انہوں نے شکایت درج کرائی ہے۔سرکاری ملازمت دلانے کا جھانسہ دے کر 60/لاکھ روپئے سے زیادہ کی رقم حاصل کرکے دھوکہ دئے جانے کا الزام لگاتے ہوئے شہر کے دوڈنائکرا لے آؤٹ کے ساکن پنیت،پروین اور دیگر مقامات سے تعلق رکھنے والے چندرو،سرینوا س سمیت چھ افراد نے ٹاؤن پولیس تھانے میں معاملہ درج کرایاہے۔
بنگلور کے ناگربھاوی کا رہنے والا پربھاکر اپنے آپ کو سکینڈری ایجوکیشن ایکزامنیشن بورڈ کا چیف سکریٹری کے طور پر متعارف کراکے بے روزگار نوجوانوں کو ملازمت دلانے کے بہانے رقم حاصل کرکے دھوکہ دیاکرتا تھا۔اطلاع کے مطابق دھوکہ باز پربھاکر نے تعلقہ کے کئی نوجوانوں سے تقریباً12تا 15لاکھ روپئے حاصل کیاہے اور نقلی حکم نامے دے کر ان نوجوانوں سے کہاہے کہ کووِڈ کی وجہ سے دفتر میں داخلہ نہیں دیاجارہاہے،مگر بینک کھاتوں میں ہر ماہ 10تا12ہزار روپئے جمع ہوتے رہیں گے۔اس کے مطابق وہ خود ماہانہ تھوڑی رقم ان نوجوانوں کے بینک کھاتوں میں جمع کرتا آرہا تھا۔


Recent Post

Popular Links