”بہار کے نئے وزیر تعلیم کو ’قومی ترانہ‘ بھی یاد نہیں“

RushdaInfotech November 19th 2020 urdu-news-paper
”بہار کے نئے وزیر تعلیم کو ’قومی ترانہ‘ بھی یاد نہیں“

پٹنہ-18 نومبر(ایجنسی)نتیش کمار حکومت میں نئے وزیر تعلیم بنے میوا لال چودھری لگاتار اپوزیشن پارٹیوں کے نشانے پر ہیں - میوالال پر بدعنوانی کے الزامات لگ چکے ہیں، جس کو لے کر لگاتار ان کی تنقید ہو رہی ہے، لیکن اب ایک ایسا ویڈیو سامنے آیا ہے جس میں وہ ہندوستان کا ’قومی ترانہ‘ یعنی ’جن گن من‘ غلط الفاظ کے ساتھ گاتے ہوئے نظر آ رہے ہیں - یہ ویڈیو مہاراشٹر کانگریس کے سینئر لیڈر سنجے نروپم نے اپنے آفیشیل ٹوئٹر ہینڈل سے شیئر کیا ہے جو تیزی کے ساتھ وائرل ہو رہا ہے- وزیر تعلیم میوالال کی اہلیت پر سوال کھڑے کرنے والا جو ویڈیو سنجے نروپم نے شیئر کیا ہے اس میں وہ ترنگا کے سامنے کھڑے ہو کر قومی ترانہ گا رہے ہیں اور ان کے آس پاس اسکولی بچے اور کچھ دیگر افراد بھی کھڑے ہیں - ویڈیو میں کچھ مقامات پر، خصوصاً آخری حصے میں انھوں نے غلط الفاظ کہے اور ایسا محسوس ہوا جیسے وہ آدھے ادھورے یاد کیے گئے قومی ترانہ کو کسی طرح پڑھ کر نکل جانا چاہتے ہیں - سنجے نروپم نے اپنے ٹوئٹ میں یہ دعویٰ بھی کیا ہے کہ بہار کے نئے وزیر تعلیم قومی ترانہ نہیں گا پاتے- دلچسپ بات یہ ہے کہ میوالال بھاگلپور زرعی یونیورسٹی کے وائس چانسلر رہ چکے ہیں، پھر بھی قومی ترانہ پوری طرح انھیں یاد نہیں - سنجے اپنے ٹوئٹ میں لکھتے ہیں ”یہ جناب پہلے کسی یونیورسٹی کے وائس چانسلر تھے، قومی ترانہ بھی نہیں گا پاتے، بدعنوانی کے سنگین الزام ان پر ہیں سو الگ- ہندوستانی جمہوریت کے ان گناہوں کو کون دھوئے گا؟


Recent Post

Popular Links