وظیفہ یاب فوجی کیلئے آج تک زمین کی منظوری نہیں ملی

RushdaInfotech November 13th 2020 urdu-news-paper
وظیفہ یاب فوجی کیلئے آج تک زمین کی منظوری نہیں ملی

سرینواس پور:12/نومبر(شبیراحمد۔نامہ نگار)فوج میں کام انجام دے کر وظیفہ یاب ہونے کے بعد آرام سے زندگی گزارنے حکومت کی طرف سے منظور کی جانے والی زمین کیلئے عرضی داخل کر کے 17سال کا عرصہ گزر گیا، اس کے باوجود زمین منظورنہیں کی گئی۔ محکمہ مالگذاری کی اس تاخیرسے بیزار ہوکر وظیفہ یاب فوجیوں نے تعلقہ آفس کے سامنے احتجاجی دھرنادیا۔فوجیوں کی ریاستی انجمن کی کولار ضلع شاخ کی طرف سے بھوک ہڑتال کی گئی۔اس احتجاج کی قیاد ت کرتے ہوئے وظیفہ یاب فوجی شیوانند ریڈی نے کہاکہ 17سالوں سے مسلسل اسی سرینواس پور تعلقہ آفس میں اراضی منظور کرنے کیلئے عرضیاں داخل کی جارہی ہیں مگر اس سلسلے میں تاحال کوئی کارروائی نہیں کی گئی ہے۔ڈپٹی کمشنرنے بھی اس سلسلے میں کئی مرتبہ خط لکھاہے،مگر تحصیلدار نے اس تعلق سے کوئی جواب نہیں دیا۔انہوں نے کہا کہ جموں کشمیرسمیت ملک کی کئی ریاستوں میں کام انجام دینے کے بعد معذور ہوجانے کی وجہ سے فوج سے وظیفہ یاب ہوگئے تھے اور 2004 میں زمین کی منظوری کیلئے عرضی داخل کی تھی اور اس کیلئے ڈپٹی کمشنرکے علاوہ سابق وزیراعظم دیوے گوڈا،سابق اسپیکر رمیش کمار،سابق وزیر سرینواس گوڈا،سابق رکن اسمبلی ایم سی سدھاکر سے سفارش کروائی تھی،مگر آج تک زمین کی منظوری تو دور کوئی واضح جواب تک موصول نہیں ہواہے۔تعلقہ دفتر کے چکر کاٹناہی روزانہ کا کام بناہواہے اور10تا 20تحصیلداروں کی تبدیلی کے بعد بھی انہیں انصاف نہیں ملاہے۔فوجیو ں کی انجمن کے ریاستی صدر ڈاکٹر شیونانے کہاکہ وظیفہ یاب فوجی شیوانند اکو پچھلے17سالوں سے اراضی منظور نہ کرنے پر یہ احتجاج کیا جا رہا ہے۔اگر تحصیلدار نے اس سلسلے میں جلد ٹھوس فیصلہ نہیں کیاتو ضلعی مراکز اورریاست بھر میں احتجاجات کئے جائیں گے۔فوجیو ں کی بھوک ہڑتال کے مقام پر پہنچ کر تحصیلدار ایس ایم سرینواس نے عرضداشت قبول کی اور کہاکہ اندرون سات دن فوجی شیوانندا کا مسئلہ حل کریں گے اور انہیں انصاف دلانے کی کوشش کریں گے۔انہوں نے کہاکہ ملک کی حفاظت کی ذمہ داری نبھانے والے فوجیوں کے ساتھ ناانصافی ہونے نہیں دیں گے۔اس احتجاج میں ہسیرو سیناکے ضلعی صدر شری رام ریڈی،نائب صدر بائراریڈی،شیوراج کے علاوہ دیگر شامل تھے۔


Recent Post

Popular Links