سورنا ریل ردکرنے کی کوئی تجویز نہیں۔ منی اپا

سورنا ریل ردکرنے کی کوئی تجویز نہیں۔ منی اپا

کے جی ایف۔10؍اکتوبر(سالار نیوز) کے جی ایف شہر کے عوام کے لئے انتہائی مفید ثابت ہوئی سورنا ریل گاڑی کو رد کرنے کی کوئی تجویز فی الحال حکومت یا محکمہ کے سامنے نہیں ہے بلکہ سورنا ٹرین کے ساتھ ایک اور ریل گاڑی دوڑانے کے بارے میں غور کیا جارہا ہے۔ یہ بات رکن پارلیمان وسابق مرکزی وزیر کے ایچ منی اپا نے کہی۔ انہوں نے یہاں اشوک نگر اور ماری کپم میں کانگریس پارٹی کے’’ گھر گھر کانگریس پروگرام‘‘ میں شرکت کرتے ہوئے اپنے خطاب میں کہا کہ سورنا ٹرین کسی بھی صورت میں ردنہیں کی جائے گی، اس سلسلے میں محکمہ ریلویز کے سینئر افسروں نے خود وضاحت کی ہے ۔ منی اپا نے بتایا کہ 12 بوگیوں والی مزید ایک ٹرین دوڑانے کے بارے میں غور کیاجارہاہے۔ منی اپا نے مزید بتایا کہ کولار ضلع میں29؍رہائشی اسکولس تعمیر کئے گئے ہیں، ریاست کے 6؍کروڑ عوام میں سے ساڑھے چار کروڑ لوگوں نے کسی نہ کسی کے ذریعہ سے حکومت کی سہولتوں کا فائدہ اٹھارہے ہیں، ایسی عوام دوست اور سکیولر حکومت کادوبارہ اقتدار پر آنا ضروری ہے اس لئے پارٹی کارکنوں کو چاہئے کہ حکومت کے ساڑھے چار سالہ کارناموں کو عوام کے سامنے پیش کریں اور آئندہ انتخابات کے لئے ابھی سے تیاریاں شروع کئے ہیں۔ سٹی منسپل کونسل صدر رمیش کمار نے اپنے خطاب میں کہا کہ امرت سٹی منصوبے کے تحت بیت منگل سے کے جی ایف شہر تک تقریباً28؍ کروڑروپیوں کی لاگت سے افزود پائپ لائن بچھائی جائے گی، اس کاتعمیری کام اندرون ایک ہفتے شروع کیاجائے گا۔ ایکسس بینک کی ڈائرکٹر روپا ششی دھر، سٹی منسپل کونسل نائب صدر جینتی سرینواسن، اسٹانڈنگ کمیٹی چیرمین لارینس، ضلع کانگریس کمیٹی صدر کے چندرا ریڈی، یوتھ کانگریس صدر فرانسیس کے جی ایف اربن ڈیولپمنٹ اتھارٹی کی چیرپرسن کے وی کماری اور دیگر موجود تھے۔



Like us to get latest Updates